وہ پاکستانی کرکٹر جس نے ورلڈ کپ کے دوران بھی اپنی بیگم ہوٹل روم کی الماری میں چھپائے رکھی

کراچی (پاکستان نیوز)زندگی کا ہر شعبہ دلچسپ واقعات سے بھرا پڑا ہے، ایسی داستانوں کیلئے پاکستان کی سرزمین تو کچھ زیادہ ہی مشہور ہے، پاکستان کرکٹ بھی کسی سے پیچھے نہیں، یہاں بھی طرح طرح کے دعوے سامنے آتے رہتے ہیں، ایک دوسرے کے خلاف سنگین الزامات، بے وفائیوں اور بدعہدیوں کے طعنے، سازشی کہانیاں، مفادات کی جنگ، یہ سب کچھ ایسے ہی واقعات کا حصہ ہیں،  بعض اوقات تو ایسی واقعات سننے کو ملتے ہیں کہ ہنسی روکنا مشکل ہوتا ہے،کبھی کسی کرکٹر کامعاشقہ پکڑا جاتاہے تو کبھی کوئی ضوابط کی خلاف وورزی کا مرتکب ٹھہرتاہے، ایسے ہی کچھ ثقلین مشتاق  نے بھی کیا جنہوں نے ورلڈ کپ کے دوران بورڈ کی پابندی کو بالائے طاق رکھتے ہوئے اپنی بیگم کو پورے ٹورنامنٹ کے دوران ساتھ رکھا، کسی بھی خطرے یا چھاپے کی صورت میں وہ بیگم کو ہوٹل روم کی الماری میں چھپادیتے تھے، یہ کوئی جھوٹی افواہ نہیں بلکہ اس کا اعتراف خود انہوں نے کیا۔

پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق سپنر ثقلین مشتاق نے انکشاف کیا کہ ورلڈ کپ 1999ء کے دوران فیملی ساتھ رکھنے پر پابندی کے باوجود انہوں نے اپنی بیگم کوساتھ رکھا اور اسے ہوٹل روم کی الماری میں چھپا دیا تھا۔

انڈیا کے خلا ف اپریل 2004ء میں آخری ٹیسٹ میچ کھیلنے والے بلے باز ثقلین مشتاق نے حال ہی میں ایک بھارتی میزبان کو انٹرویو کے دوران ماضی کی ایک خوبصورت یاد تازہ کرتے ہوئے بتایا کہ 1999ء کے ورلڈ کپ کے دوران اُن کی اہلیہ بھی اُن کے ساتھ ہوٹل روم میں مقیم تھیں، کرکٹ بورڈ کی جانب سے اچانک یہ فیصلہ کیا گیا کہ کھلاڑیوں کو اپنے ساتھ فیملی رکھنے کی اجازت نہیں، مجھے بورڈ کا یہ فیصلہ بالکل پسند نہیں آیا تھا اور سب سے چھپ کر پورے ورلڈ کپ کے دوران اپنی بیگم کو اپنے ساتھ ہی ہوٹل روم میں رکھا تھا۔ ثقلین مشتاق نے بتایا کہ کچھ جاسوس بھی چھوڑے گئے جو کھلاڑیوں کے روم میں آتے جاتے رہتے تھے اور نظر رکھتے تھے کہ کھلاڑی کیا کر رہے ہیں،ایک دن میرے کمرے میں اظہر محمود اور یوسف اس حوالے سے بات کرنے آئے، اُن کے اصرار پر میں نے اپنی بیوی سے باہر آنے کو کہا اور وہ الماری سے باہر آ گئی، وہ کافی وقت سے اندر الماری میں بند تھی، اس نے بھی سکھ کا سانس لیا۔

یہاں یہ امربھی قبل ذکر ہے کہ کرکٹ بورڈ کئی دفعہ صورتحال کو سامنے رکھتے ہوئے کھلاڑیوں کو فیملی ساتھ لے جانے کی اجازت نہیں دیتا، تاکہ ٹورنامنٹ یا دورے کے دوران کھلاڑیوں کی توجہ صرف کھیل پر ہی مرکوز رہے، اور ان کی کارکردگی پر کوئی منفی اثر نہ پڑے، لیکن اگر کوئی ثقلین مشتاق جیسا کھلاڑی بیگم کو الماری میں ہی رکھ لے تو پھر آ پ ہی بتائیں کہ کیا، کیا جاسکتا ہے؟ الماری میں کسی کا دم ہی گھٹ سکتا ہے۔  

 





متعلقہ خبریں

Not Any News

ویڈیو
صحت

چہرے کے کیل مہاسوں سے نجات کے نسخے

دنیا بھر سے چار انتہائی دلچسپ بیوٹی ٹپس

کورونا کچھ لوگوں کو زیادہ متاثر کیوں کرتا ہے؟ معمہ حل

آپکاشہر

ary news live

ary news live

پولیس میں ہزاروں بھرتیاں، چند دنوں میں اشتہار جاری ہونے کا امکان

بلاگ

وہ پاکستانی کرکٹر جس نے ورلڈ کپ کے دوران بھی اپنی بیگم ہوٹل روم کی الماری میں چھپائے رکھی

افغانستان کی قومی ٹیم کا کھلاڑی ’ کرپشن ‘ کرتے پکڑا گیا ، بڑی سزا سنا کر مثال قائم کر دی گئی

پاکستانی کرکٹر عمر اکمل پر پابندی عائد کردی گئی

Copyright 2020 © Pakistan News, All rights reserved.
All rights reserved. Reproduction or misrepresentation of material available on this web site in any form is infringement of copyright and is strictly prohibited.