A PHP Error was encountered

Severity: Notice

Message: Only variable references should be returned by reference

Filename: core/Common.php

Line Number: 257

A PHP Error was encountered

Severity: Warning

Message: Cannot modify header information - headers already sent by (output started at /home/pakist14/public_html/system/core/Exceptions.php:185)

Filename: libraries/Session.php

Line Number: 672

Pakistan News

اخبارات

اہم خبریں


آج سے ہزار سال بعد دنیا کیسی ہوگی ؟

آج سے ہزار سال بعد ہم او

اسلامی معاشرے کے خدوخال

دین اسلام تعمیر سیر ت و ک

16 دسمبر

16 دسمبر میں مون ہوں‘ نہی

سوات کی بیٹی

چلو کہ دشتِ جہالت کو خیر

عمران خان کے لیے

خان صاحب آپ نے 25 اپریل 1996

یا اللہ ہمیں بچالے

ارادوں اور بعض اوقات پخت

تحریکیں زور کیسے پکڑتی ہیں

دنیا کا شاید ہی کوئی ملک

عمران خان او ر ڈاکٹر طاہر القادری

کالم نگار | رحمت خان ورد

راستہ بن چکا ہے : جاوید چوہدری

جولاہاکپڑے بُننے والوں ک

کچھ قادری صاحب کے بارے میں

پاکستان پیپلزپارٹی کے دو

لاہور کینال اور موت کا خونی کھیل

ایسا محسوس ہوتا ہے کہ لاہ

آ بیل مجھے مار

جاوید قاضی کسی زمانے میں

قرض پر مبنی معیشت

پاکستان جوکہ غربت کے منح

Meet Us

Name*
Email*
Message*

سعودی عرب میں 60 فیصد شادیاں پہلے سال ہی ناکامی سے دوچار ہوجاتی ہیں،رپورٹ

Last Updated:25-03-2015

ریاض: سعودی عرب میں طلاق کے رجحان میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے جہاں اعدادوشمار کے مطابق شادی کے پہلے سال ہی 60 فیصد شادیاں ناکامی سے دوچار ہوتی ہیں۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے سعودی وزارت انصاف کے اعلیٰ عہدیدار نے بتایا کہ سعودی عرب میں طلاق کی بڑھتی ہوئی شرح کی کئی وجوہات ہیں جن میں 25 فیصد طلاقیں شرعی معاملات کا صحیح علم نہ ہونے، 20 فیصد نان نفقہ اور بیوی کی جانب سے پرتعیش زندگی کے مطالبے جب کہ 20 فیصد طلاقوں کی وجہ سماجی رابطوں کی ویب سائٹس ہیں۔ اعلیٰ عہدیدار کے مطابق 15 فیصد طلاقیں میاں بیوی کے درمیان اعتماد کا فقدان جب کہ 10 فیصد خاوند کی ایک سے زیادہ شادیوں اور بیویوں سےمساویانہ سلوک نہ کرنے کی وجہ سے ہوتی ہیں۔ دوسری جانب سعودی حکومت کے اعدادوشمار کے مطابق ملک میں طلاق کی شرح 35 فی صد تک ہوچکی ہے اور یہ دنیا میں طلاق کی اوسط شرح سے کہیں زیادہ ہے جب کہ دنیا میں اس وقت طلاق کی اوسط شرح 18 سے 22 فی صد ہے۔

Share or Like:

Fallow Us:

مزید خبریں